روس کے ساتھ چار ایم آئی 35 ہیلی کاپٹرز خریدنے کا معاہدہ

1
1273
Mi-35 Helicopter

پاکستان کے عسکری ذرائع کا کہنا ہے کہ پاکستان اور روس کے درمیان ایم آئی 35 ہیلی کاپٹر کی خریداری کا معاہدہ طے پا گیا ہے۔

عسکری ذرائع نے بی بی سی اردو کو بتایا کہ معاہدے کے تحت پاکستان روس سے چار ایم آئی 35 ہیلی کاپٹرز خریدے گا۔

یاد رہے کہ پاکستان اور روس کے درمیان ان ہیلی کاپٹرز کی خریداری کے لیے بات چیت ایک سال سے جاری تھی۔

Mi-35 Helicopter

کیا پاک روس تعلقات آگے بڑھ پائیں گے؟

واضح رہے کہ تقریباً جون میں بّری فوج کے سربراہ جنرل راحیل شریف نے روس کا دورہ کیا تھا۔ اس دورے کے دوران انھوں نے دفاعی نمائش کا دورہ بھی کیا تھا۔

عسکری ذرائع کا کہنا ہے کہ اس دورے کے دوران ہی روس سے ان ہیلی کاپٹرز خریدنے کے معاہدے کو حتمی شکل دی گئی تھی۔

واضح رہے کہ روس نے کئی برس قبل پاکستان پر سے اسلحے کی فروخت پر عائد کردہ پابندی اٹھا لی تھی۔

پاکستان روس سے ماضی میں اسی نوعیت کے ہیلی کاپٹر اور دیگر فوجی سازوسامان لیتا رہا ہے۔

تاہم افغانستان پر روسی قبضے اور روس مخالف افغان مجاہدین کو پاکستانی امداد کے بعد روس نے پاکستان پر ہر طرح کے فوجی سازوسامان کی فروخت پر پابندی عائد کر دی تھی۔

اس سے قبل روسی سرکاری اسلحہ ساز ادارے کے سربراہ سرگے خیمازوف نے روسی سرکاری خبر رساں ادارے اتار تاس کو بتایا تھا کہ ان کی حکومت نے پاکستان پر عائد یہ یک طرفہ پابندی ختم کر دی ہے۔

سرگے خیمازوف کا کہنا تھا کہ حکومت نے پاکستان کو متعدد ہیلی کاپٹر فروخت کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے اور ہم ان کی فراہمی کے شیڈیول پر پاکستان کے ساتھ بات چیت کر رہے ہیں۔

پاکستانی فوج 60 کی دہائی میں روس سے ملنے والے مال بردار ہیلی کاپٹر ابھی تک استعمال کر رہی ہے۔

1 COMMENT

  1. Good day! I really would like to provide you with a huge thumbs up for the great info you’ve got on this site about this post.

    I am returning to your internet site for more soon.

LEAVE A REPLY